مورڑہ اصلی سورما تھا۔۔ کیا ہوا کہ اس کے پاؤں میں تھوڑاسالنگ تھا ۔۔مگراس کادل ہمت اور حوصلے کی چٹان تھا
یہ صدیوں صدیوں پہلے کی بات ہے ۔۔یہ قدیم کراچی کی کہانی ہے۔۔مورڑہ اپنے چھ بھائیوں کے ساتھ ماڑی پورکے آس پاس کہیں رہتاتھا ۔۔اس کے بھائی مچھلیاں پکڑتے تھے۔۔سب بہت اچھاتھا-اور پھر اچانک ایک بہت بڑامگرمچھ کہیں سے ان کے ساحل پرآگیا۔۔اب جو بھی مچھلی پکڑنے جائے، یہ مگرمچھ اسے کھاجائے۔۔ایک دن خداکا کرنا یہ ہواکہ مورڑہ کے چھ بھائی رات کو مچھلی پکڑنے گئے اور پھر کبھی واپس نہ آئے ۔۔مگرمچھ اس کے بھائیوں کو کھاچکا تھا۔۔۔اب تو مورڑہ غصے میں آگیا- اس نے ایک بہت بڑاپنجرہ بنایا، اس کی تیز تیزنوکیں باہر کی جانب نکلی ہوئی تھیں
بھائی صاحب !!! آگے کیاہوا!!! آپ بھی سنیں گے تو مورڑہ کی ہمت کی داد دیں گے
مورڑہ صاحب اس پنجرے میں بیٹھے اور تیمر کے جنگلات کے ساتھ سمندر کے قریب بیٹھ گئے کہ وہ مگرمچھ آئےتوسہی ۔۔
اورپھر اس مگرمچھ کو بھوک لگی، اس نے آؤدیکھا نہ تاؤ۔۔دیکھا تو مورڑہ کو دیکھا اور منہ ماردیا۔۔
نرامگرمچھ تھا۔۔عقل نام کی نہیں تھی، اس نے اس پنجرے کا خیال ہی نہیں کیا، جس کی نوکیں بہت تیز تھیں، مورڑہ مگرمچھ کا ترنوالہ توبعدمیں بنتا، وہ پنجرہ ہی مگرمچھ کے منہ میں ہی پھنس گیا
اب اگلتے بن اور نہ نگلتے بن ۔۔۔پنجرے کی نوکیں مگرمچھ کے منہ میں پھنس چکی تھیں ۔۔مورڑہ نے بھی پورابندوبست کیا ہواتھا۔۔اس نے اپنے پنجرے کے ساتھ بندھی رسی کھینچی ، وہ رسی ایک بیل سے بندھی تھی، اس بیل کے ساتھ بہت سارے مچھیرے رسی کھینچے جانے کے اشارے کے منتظرتھے
اب بیل نے مچھیروں کے اشارے پر مگرمچھ کو کھینچنے کے لیے زورلگایا مگر کہاں وہ بڑا سا مگرمچھ اورکہاں کمزورسابیل ۔۔مچھیروں کے پاس یہی موقع تھا۔۔ان کا سورما مورڑہ مگرمچھ کے منہ میں تھا۔۔۔انہوں نے بیل کی کمر پرجھاڑیوں سے آگ لگادی ۔۔ادھر بیل سرپٹ دوڑا اور ادھر مگرمچھ کھنچ کرساحل پر آگیا
اب مورڑہ پنجرے سے نکلا اور غصے سے بھرے ماہی گیر بھی آگے بڑھے اور مگرمچھ کو کاٹ کررکھ دیا۔۔ مورڑہ نے اپنے چھ بھائیوں کی لاشیں بھی مگرمچھ کے پیٹ سے نکال لیں
اگرآپ کا گزرکبھی کراچی میں گل بائی سے ہوتو اس کے پل کے نیچے مورڑہ کے بھائیوں کی وہ چھ قبریں موجود ہیں۔۔مورڑہ کی قبر بھی تھوڑے فاصلے پر ہے ۔۔میں نے تووہ قبریں دیکھ لیں۔۔اور مورڑہ کی جرات کو سلام کرلیا
آپ کا بھی کبھی کسی اصلی ہیروکو خراج تحسین پیش کرنے کا موڈ ہو تو گل بائی کا چکر لگاتے ہوئے قبروں پر حاضری ضرور دیجئے گا
یہ ان قبروں کی تصاویر ہیں-

Labels:
Reactions: 

Enter your email address:

Delivered by FeedBurner

Live Match Score

فیس بک پر تلاش کریں

مفت اکاؤنٹ کھولیں

Jobs Career in photography today!

Jobs Career in photography today!
Click on ads and grab your job.

گوگل پلس followers

گوگل پلس followers