کمال ہے ، سارے ملک کو کیا ہے. ہر کوئی چوھدری ہے یہاں، ُشکر ہے الله کا. سب کو معلوم ہے کہ کیا ہونا چاہئے اور کیسے.اتنا علم ہے ہمارے ملک میں. میں کھڑا ہوا تو میں نے کیڑے نکالے. اور لاٹھی لے کے چل پڑا. سب کو ہانکنے. ہم باتیں تو بڑی بڑی کرتے ہیں. کرنی بھی چاہئیں. ساری عوام جب جاگی ہو تو ایسا ہی ہوتا ہے. سب بات کرتے ہیں. سب ہی مشورہ دیتے ہیں. دینا بھی چاہئے. الرٹ ہونے کے اور بھی بہت سے فائدے ہیں. وہ کسی کو سونے نہیں دیتے. جب سارا ملک ساری قوم جاگے گی تو جاگا جاگا پاکستان ہو گا.   تفصیل سے پڑھیے
باہر سے کسی کی ضرورت نہیں پڑے گی. مگر ہم اس دن کے انتظار میں ہیں. انتظار میں ہی ہیں کتنے ہی سالوں سے. زیادہ نہیں صرف تریسٹھ سال ہی ہویے ہیں. اتنا انتظار کافی نہیں ہے. تب ہی تو کچھ ہوا نہیں اب تک ہر وقت ہم یہ ہی کہتے ہیں کہ کچھ نہیں کرتے لوگ. آج ایسا کرتے ہیں کہ لوگوں کو تنقید کا نشانہ نہیں بناتے. اس شے پہ دھیان لگاتے ہیں کہ مجھے اکیلے میں کیا کرنا ہے. خود سے. خود کے لئے. خود کے ملک کے لئے. ہمیں چاہئے کہ صرف خود کی طرف دھیان دیں کہ میں اکیلا کیا کر سکتا ہوں. جماعت بنانے یا بننے سے پہلے. کام اکیلے سے ہی شروع ہوتا ہے. کام شروع کیسے کرنا ہے؟ سب سے پہلے تو معلوم ہو کہ تم بھی سب انسانوں میں سے ہی ایک انسان ہو. کام کرنے والے بن کے کوئی مہان نہیں ہو گے. ایسا ہو گا تو جماعت ضرور بنے گی. نام بھی ہو گا. کام نہیں ہو گا. کام شائد کرنا بھی نہیں چاہتا کوئی

.ایک کو میں نے سنا بھی دیکھا بھی. معصوم یتیم بچوں کا ادارہ چلاتے ہیں. روز جاتے ہیں. نام ہے. کام بھی کرتے ہیں. جانے سے پہلے فون ہوتا ہے ٹھنڈا پانی ہونا چاہئے. کمرہ ٹھنڈا ہونا چاہئے. میں ہوں تو ہر شے موجود ہو میز پر. میرے پاس فالتو کا وقت نہیں کہ برباد ہو. یہ ہیں کام چلانے والے. نام والے. ان کے بڑے نام ہیں. بڑے کام ہیں. کوئی تو سوچے کہ یہ سب کیا ہے. ہم ان بچوں کو ہمارا حصہ بنانا چاہتے ہیں. کر کیا رہے ہیں. ہم اونچی ذات کے ہیں، چوھدری ہیں اور وہ عوام. جب تک ہم چودھری رہیں گے کچھ نہیں هونے والا. کسی کا کچھ نہیں سنوارنے والا. نہ ہی کسی اور کا، نہ ہی میرا. خود سے خود ہی سوال کرو. کیا میں کوئی تبدیلی چاہتا ہوں؟ میں تبدیلی چاہتا ہوں تو کیا میں خود بھی تبدیل ہووں گا؟ کیا میں یہ سمجھتا ہوں کہ میں بھی عوام ہوں؟ اگر میں ممبر سے نیچے نہیں اتروں گا تو کچھ نہیں ہونے والا. کوئی تبدیلی نہیں آنے والی۔

اس سے معلوم پڑتا ہے کہ میرا کوئی الگ ہی انصاف ہے. میرا کوئی الگ ہی گول ہے. میں صرف بولنے والا ہوں. نہ کرنے والا ہوں، نہ ہی کروانے والا ہوں. اگر میں اس بدلاؤ کے لئے کوئی بھی کام کرنے والا ہوتا اینٹ سے اینٹ بجا دیتا کم از کم خود کے قریب کے لوگوں سے ہی. اور نہ ماننے والوں سے کچھ کنارہ ہی کر لیتا. معلوم تو پڑتا کہ میں وہ سب پسند نہیں کرتا جو ہو رہا ہے. صرف منہ سے کہنے سے نہیں چلے گا. نظر بھی آے. آپ پریشان بھی بھی ہوں کہ بدلاؤ نہیں آ رہا. مجھے تو بس چیخ چہاڑے کا کام ہے. اس سے تو کوئی نہیں بدلے گا. سمجھ نہیں آ رہی سوال کرنے والوں کو اور جواب دینے والوں کو. کہ کہیں کچھ نہیں ہونے والا. اس لئے بات کرنا بند کر دیں. اگر بند نہیں کرنا تو اٹھائیں خود کو جگائیں. اور اگر نہ جگانے کا سوچ ہی لیا ہے تو چُپ کر جاو. نہ خود کے متھے لگو نہ ہی کسی کے۔

تو یہ معلوم پڑا کہ حشر مچانے والے سب ہی اداکار ہیں. فنکار ہیں. رونق کے علاوہ ان کا کوئی بھی مفہوم نہیں ہے. مقصد کے بغیر کھڑے ہیں، بلکہ ا ُچھل رہے ہیں. ایسے ہی ہے جیسے. ایک بچہ کسی بات کے لئے رونا شروع کرتا ہے. بھاں بھاں شروع کرتا ہے تو اس کو معلوم ہوتا ہے کہ کس بات کے لئے زد کر رہا ہے. رو رہا ہے. کچھ وقت گزرنے کے بعد بس بھاں بھاں رہ جاتی ہے. اگر روندو بچے سے پوچھو تو اس کو یاد نہیں رہتا کہ کیا ضد کر رہا تھا. کیا مانگ تھی. اگر باتوں میں لگا لو تو آرام سے بہل جاتا ہے. کسی بھی طرف لگا دو آرام سے وہاں محو ہو جاتا ہے. اور محو ہی رہتا ہے. پیچھے مڑ کر نہیں دیکھتا. ہاں اگر کبھی زندگی میں دھیان آ ہی جاے تو اور بات ہے.

اس سے یہ ظاہر ہوا کہ انصاف کا نہ ہی کسی کو ادراک ہے اور نہ ہی کسی کی آرزو. اگر معلوم ہی نہیں اور احساس ہی نہیں ہے تو مانگ کیسے ہو سکتی ہے. مانگیں گے نہیں تو ظاہر ہے ملے گا نہیں. جس شے کا احساس نہ ہو. مانگ نہ ہو، اگر سامنے آ بھی جاے تو کیا معلوم کیا چاہئے. نتیجہ کیا ہے؟ میں کہنا کیا چاہ رہا ہوں؟ میں کہ رہا ہوں کہ انصاف انصاف کا نعرہ نہ ہی لگاؤ. آپ لوگ کو معلوم ہی نہیں کہ کیا ہو رہا ہے اور کیا ہونا چاہئے. اگر کوئی بدلاؤ چاہئے ہوتا. کسی حالت یا ہونی سے تو ہم فکرمند ہوتے. زندگی کو کھیل نہ جانتے. یوں اٹھلاتے نہ پھرتے. بے فکری شکلوں سے نظر آتی، گفتگوؤں سے نہیں. سو چُپ جائیے، چُپ ہو ہی جائیے. خود کو دیکھئے اور یہ سوال بنیے کہ میں کیا ہوں؟ کیا چاہتا ہوں؟ جب تک جواب نہیں ملتا، شش شش، چُپ
Labels: ,
Reactions: 

Enter your email address:

Delivered by FeedBurner

Live Match Score

فیس بک پر تلاش کریں

مفت اکاؤنٹ کھولیں

Jobs Career in photography today!

Jobs Career in photography today!
Click on ads and grab your job.

گوگل پلس followers

گوگل پلس followers