میں نےفیصلہ کرلیا ہے۔ میں اپنےچہرےپہ یہ نقاب اب اور نہیں پہنوں گا۔ میں نہ تمہارےقہقہوں میں اپنےقہقہےشامل کروں گا نہ تمہارےآنسوئوں سےاپنی آنکھیں بھگوئوں گا۔ میں یہ سب چہرےجلا کر خاک کردوں گا جو مجھ سےمیری پہچان چھین بیٹھےہیں۔ میں سب سےپہلےوہ چہرہ بگاڑوں گا جسےاوڑھتےہی تم مجھےکسی عالم کا درجہ دیتےہو ،میری تعظیم میں بچھےجاتےہو۔ میں اس شرابی کا چہرہ بھی خراب کردوں گا جسےنشےمیں ڈولتا دیکھ کر تم استغفار پڑھتےہو،اپنا راستہ بدل لیتےہو۔ اوراس مسخرےکا چہرہ برباد کرنا میں کیسےبھول سکتا ہوں جس کی ہر بات تمہیں ہنسنےلوٹ پوٹ ہوجانےپر مجبور کرتی ہے۔ آج میں یہ سب چہرےجلا ڈالوں گا۔ اب مجھےایسا کرنےسےکوئی نہیں روک سکتا ہر روز ایک نیا چہرہ پہن کر تمہارا ساتھ دینےسےبہتر ہےمیں اپنا یہ برہنہ چہرہ ایسےہی کھلا چھوڑ دوں ۔ 
Labels:
Reactions: 

Enter your email address:

Delivered by FeedBurner

Live Match Score

فیس بک پر تلاش کریں

مفت اکاؤنٹ کھولیں

Jobs Career in photography today!

Jobs Career in photography today!
Click on ads and grab your job.

گوگل پلس followers

گوگل پلس followers